مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالیاں جاری ہیں ، ترجمان دفتر خارجہ

December 12, 2019 1:20 pm

جدت ویب ڈیسک ::) ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر محمد فیصل نے ہفتہ وار میڈیا بریفنگ میں کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں 132 روز سے انسانی حقوق کی پامالیاں جاری ہیں۔
ڈاکٹر فیصل نے ہفتہ وار بریفنگ میں بتایا کہ مقبوضہ کشمیر میں 132 دن سے بھارتی فورسز کی جانب سے لاک ڈاون جاری ہے، ذرائع ابلاغ مکمل طور پر بند ہیں انسانی حقوق کی تنظیموں کو وہاں جانے کی اجازت نہیں دی جا رہی ۔ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ بھارتی لوک سبھا کی جانب سے قانون سازی انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہے، بھارت میں شہریت سے متعلق حالیہ قانون سازی سے اقلیتوں کیلئے سکیورٹی کے شدید خطرات پیدا ہو چکے ہیں ، یہ ہندو راشٹریہ کی سوچ مسلط کرنے کی سازش ہے۔
ان کا کہنا تھا کہ پاک روس باہمی تعاون کمیشن کے مذاکرات کا چھٹا دور اسلام آباد میں منعقد ہوا، وزیر خارجہ نے ہارٹ آف ایشیاء کے بین الالوزراتی اجلاس میں شرکت کی اس موقع پر وزیر خارجہ نے ترک صدر اور ترک وزیر خارجہ اے بھی ملاقاتیں کیں انہوں نے پاک ترک تاریخی تعلقات پر روشنی ڈالی اور انہیں آیندہ وسعت دینے پر غور کیا۔

مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالیاں جاری ہیں ، ترجمان دفتر خارجہ

ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر محمد فیصل نے ہفتہ وار میڈیا بریفنگ میں کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں 132 روز سے انسانی حقوق کی پامالیاں جاری ہیں۔ڈاکٹر فیصل نے ہفتہ وار بریفنگ میں بتایا کہ مقبوضہ کشمیر میں 132 دن سے بھارتی فورسز کی جانب سے لاک ڈاون جاری ہے، ذرائع ابلاغ مکمل طور پر بند ہیں انسانی حقوق کی تنظیموں کو وہاں جانے کی اجازت نہیں دی جا رہی ۔ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ بھارتی لوک سبھا کی جانب سے قانون سازی انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہے، بھارت میں شہریت سے متعلق حالیہ قانون سازی سے اقلیتوں کیلئے سکیورٹی کے شدید خطرات پیدا ہو چکے ہیں ، یہ ہندو راشٹریہ کی سوچ مسلط کرنے کی سازش ہے۔ان کا کہنا تھا کہ پاک روس باہمی تعاون کمیشن کے مذاکرات کا چھٹا دور اسلام آباد میں منعقد ہوا، وزیر خارجہ نے ہارٹ آف ایشیاء کے بین الالوزراتی اجلاس میں شرکت کی اس موقع پر وزیر خارجہ نے ترک صدر اور ترک وزیر خارجہ اے بھی ملاقاتیں کیں انہوں نے پاک ترک تاریخی تعلقات پر روشنی ڈالی اور انہیں آیندہ وسعت دینے پر غور کیا۔

Posted by Daily Jiddat Karachi on Thursday, December 12, 2019

متعلقہ خبریں