قندیل بلوچ قتل کیس میں کورٹ نے ملزمان بھائیوں کی معافی سے متعلق درخواست مسترد کر دی

August 22, 2019 6:04 pm

جدت ویب ڈیسک ::عدالت نے ریمارکس دئیے کہ غیرت کے نام پر قتل کا فیصلہ تمام گواہوں کی شہادتیں قلمبند ہونے کے بعد کیا جائے گا۔
عدالت میں قندیل بلوچ کے والدین نے اپنے بیٹوں کو معاف کرنے کی درخواست دائر کی تھی کہ ہم نے اپنے بیٹوں محمد وسیم اور اسلم شاہین کو اللہ کے واسطے معاف کیا، عدالت بری کرے ۔ عدالت نے مزید گواہان کی شہادتوں کے لئے سماعت 24 اگست تک ملتوی کردی۔قندیل بلوچ کو 15 جولائی 2016 کو اس کے بھائی وسیم نے مظفر آباد میں قتل کردیا تھا۔ قندیل بلوچ کے والد محمد عظیم نے بیٹے محمد وسیم اور اسکے ساتھیوں حق نواز ، ظفر اور ڈرائیور باسط کیخلاف مقدمہ درج کروایا تھا۔پولیس نے قندیل بلوچ کے بھائیوں محمد عارف ، اسلم شاہین اور مفتی عبدالقوی کو بھی شامل تفتیش کیا تھا ۔ ملزمان نے اپنی بہن قندیل بلوچ کو سوشل میڈیا پر بے باک ویڈیوز کی وجہ سے غیرت کے نام پر قتل کا اعتراف کیا تھا۔

متعلقہ خبریں